Entertainment

راکھی کے خلاف ایف آئی آر درج کرانے پر شرلین چوپڑا کو نوٹس جاری

ممبئی، 05 دسمبر : بمبئی ہائی کورٹ نے بگ باس فیم ماڈل راکھی ساونت کی درخواست پر اداکارہ شرلین چوپڑا کو نوٹس جاری کیا ہے، جس میں شرلین کی جانب سے ہتک عزت اور غیر اخلاقی برتاؤ کے الزام میں درج ایف آئی آر کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا گیا ہے۔ راکھی ساونت نے اپنی درخواست میں الزام لگایا ہے کہ ساتھی ماڈل نے بدلہ لینے کے لیے ان کے خلاف معاملہ درج کرایا ہے۔ راکھی کی درخواست میں کہا گیا ہے، "شکایت کنندہ کے جھوٹے الزامات اور ہتک آمیز بیانات سے نہ صرف ذاتی پریشانی ہوئی ہے بلکہ یہ راکھی ساونت کے کامیاب کیریئر کو بھی برباد کرنے کی کوشش ہے۔ یہ واضح ہے کہ شکایت کنندہ نے بددیانتی اور انتقام کی وجہ سے جھوٹی ایف آئی آر درج کرائی ہے۔ خیال ر ہے کہ 31 اکتوبر 2022 کو امبولی پولیس اسٹیشن نے ساونت کے خلاف معاملہ درج کیا اور الزام لگایا تھا کہ انہوں نے شکایت کنندہ کے کچھ ویڈیوز دکھائے اور توہین آمیز بیانات دیئے۔ راکھی پر تعزیرات ہند (آئی پی سی) کی دفعہ 354 (اے) (عورت کی عزت کو مجروح کرنا)، 500 (ہتک عزت)، 504 (مجرمانہ دھمکی)، 509 (بھڑکانے کی کوشش) اور 34 (مشترکہ ارادہ) کے تحت معاملہ درج کیا گیا ہے۔اور انفارمیشن اینڈ ٹیکنالوجی ایکٹ (آئی ٹی ایکٹ) کی دفعہ 67(A) کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی تھی۔

Source: uni news service

Post
Send
Kolkata Sports Entertainment

Please vote this article

0 Responses
Best
Good
Okay
Bad

Related Articles

Post your comment

0 Comments

No comments