Bengal

ہندو مہاسبھا بنگال کی تمام بیالیس سیٹوں پر چناﺅ لڑے گی

بنگال میں لوک سبھا انتخابات کے لئے تیاری کا عمل جاری ہے۔ پانچ ریاستوں کے اسمبلی انتخابات کے نتائج دیکھ کر بی جے پی 'ڈبل انجن' کی امیدیں باندھ رہی ہے۔ ادھر ترنمول پھر صاف کہہ رہی ہے کہ دوسری ریاستوں میں ووٹوں کا اثر بنگالمیں محسوس نہیں ہوگا۔ اس درمیان ریاست کی سیاست میں ایک نیا موڑ آیا ہے۔ آل انڈیا ہندو مہاسبھا نے آئندہ لوک سبھا انتخابات کے حوالے سے ایک مشہور فیصلہ لیا ہے۔ سال لوک سبھا انتخابات کی طرف موڑ گیا ہے۔ وہاں انہوں نے بنگال سے 42 سیٹوں پر الیکشن لڑنے کا ہدف رکھا ہے۔ تنظیم کے ریاستی صدر چندرچور گوسوامی نے آج ایک بیان میں کہا، "ہم مغربی بنگال کے 42 مراکز پر آئندہ لوک سبھا انتخابات لڑنے جا رہے ہیں اور فیصلہ کن قوت ہوں گے جو مغربی بنگال کے 42 مراکز کے نتائج کا فیصلہ کریں گے۔ "آل انڈیا ہندو مہاسبھا نے ٹھاکر نگر کی متوا برادری کے ایک حصے کو اپنے ساتھ کھینچ لیا ہے۔ چندرچور گوسوامیرس نے متواو¿ں کے ساتھ مل کر اپنی علاقائی کمیٹیاں بنائی ہیں۔ اس کے بعد آل انڈیا ہندو مہاسبھا کے مغربی بنگال صوبے کے ریاستی صدر نے این آر سی کے غیر منصفانہ نفاذ کے خلاف ’مہابھارت دھرمیودھ‘ کی آواز دی۔

Source: Mashriq News service

Post
Send
Kolkata Sports Entertainment

Please vote this article

0 Responses
Best
Good
Okay
Bad

Related Articles

Post your comment

0 Comments

No comments