دولہے نے شادی سے اغوا کیا سالی کا

مرینا، 12 دسمبر :مدھیہ پردیش کے ضلع مرینا میں نابالغ لڑکی کی شادی کو خواتین و اطفال کے فلاح و بہبود کے محکمہ کے افسران کی جانب سے رکوانے کے بعد دولہا اپنی ہونے والی دلہن کی گیارہ برس چھوٹی بہن ’سالی‘ کا اغوا کر کے لے گیا۔
پولیس نے مستعدی کا مظاہرہ کرتے ہوئے گذشتہ روز ہی لڑکی کو برآمد کر لیا لیکن ملزم دولہا اب بھی گرفت سے باہر ہے۔
ذرائع نے کہا کہ ضلع کے انباہ بلاک کے موضع پدوکاپورہ میں گذشتہ روز ایک 14 برس کی دوشیزہ کی شادی ہونے کی اطلاع ملنے پر خواتین و اطفال کے فلاح و بہود کے محکمہ کی ٹیم سرگرم ہو گئی اور اس نے موقع پر پہنچ کر شادی رکوا دی۔ پولیس جب دلہن اور اس کے اہل خانہ کو سمجھانے کے لیے پورسہ تھانے لے کر آئی تو موقع کا فائدہ پا کر غصے میں آ کر دولہا دلہن کی 11 سال کی بہن کو اغوا کرکے لے گیا۔
پولیس نے کچھ دیر بعد لڑکی کو دولہا ونود سکھبار (22) سے آزاد کروا لیا لیکن دولہا موقع سے بھاگنے میں کامیاب ہو گیا۔ نابالغ لڑکی کی شادی رکوانے کی کوشش کرنے والی خاتون شکنتلا سکھبار کو پولیس نے گرفتار کر لیا ہے اور ملزم دولہے کی تلاش جاری ہے۔(یو این آئی)

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔