مغربی بنگال میں جے ایم انتخاب میں نہیں لے گی حصہ ، ترنمول کانگریس کی حمایت کا اعلان

رانچی ، 12 مارچ مغربی بنگال اسمبلی انتخاب میں جھارکھنڈ مکتی مورچہ ( جے ایم ایم ) انتخاب نہیں لڑے گی اور بی جے پی مخالف ووٹوں کو منتشر ہونے سے بچانے کیلئے اس نے ترنمول کانگریس ( ٹی ایم سی ) کو حمایت دینے کا اعلان کیا ہے ۔
جے ایم ایم کے کارگذار صدر اور جھارکھنڈ کے وزیراعلیٰ ہیمنت سورین نے جمعہ کو نامہ نگاروں سے بات چیت میں کہاکہ ٹی ایم سی سپریمو اور مغربی بنگال کی وزیراعلیٰ ممتابنرجی نے اسمبلی انتخاب میں حمایت کرنے سے متعلق فون کیا تھا اور خط بھی لکھا تھا۔ اس کے بعد جے ایم ایم سپریمو شیبو سورین سے بھی گفتگو کی گئی اور پارٹی کے اندر صلاح ومشورہ کے بعد جے ایم ایم نے وہاں ٹی ایم سی کو حمایت دینے کا فیصلہ لیاہے ۔ انہوں نے کہاکہ جس طرح سے فرقہ پرست طاقتیں ملک بھر میں پھیل رہی ہیں ویسی حالت میں ان طاقتوں کو قائم کرنے میں ایک وجہ جے ایم ایم بھی نہ بن جائے ، اس لئے یہ فیصلہ لیا گیاہے ۔
مسٹر سورین نے تین ۔ چار دن قبل دہلی دورے کے دوران بھی نامہ نگاروںسے بات چیت میں اس بات کا اشارہ دیا تھا۔ وہیں رانچی لوٹنے کے بعد انہوں نے پارٹی سپریمو اور راجیہ سبھارکن شیبو سورین سے بات چیت کے بعد یہ فیصلہ لیا ۔ اس سے قبل مسٹر ہیمنت سورین کے مغربی بنگال کے جھارگرام میں جے ایم ایم کی ایک ریلی میں حصہ لینے کے بعد اسے مغربی بنگال اسمبلی انتخاب سے متعلق پارٹی کی تیاری مانی جارہی تھی ۔
جے ایم ایم کی اس ریلی پر ٹی ایم سی سپریمو ممتا بنرجی نے بھی سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا تھاکہ جھارکھنڈ اسمبلی انتخاب میں انہوںنے بی جے پی مخالف ووٹوں کو روکنے کاکام کیا تھا اس لئے جے ایم ایم کو پہلے اپنی ریاست کے لوگوں کے مسائل کو حل کرنے پر دھیان دینا چاہئے ۔( یواین آئی )