کووڈ شیلڈ کے ٹیکے لگانے کا وقت آ پہنچا بھارت بائیوٹیک نے پہلا دیسی ٹیکہ تیار کیا

سنیچر کے دن ملک کے 125 اضلاع میں کووڈ ویکسین کی جانچ سے متعلق سارے ملک میں آزمائشی عمل مکمل کرلیا گیا۔ مرکزی وزیر صحت ڈاکٹر ہرش وردھن کے مطابق سب سے پہلے کووڈ شیلڈ کے ٹیکے ہیلتھ کیئر اور فرنٹ لائن ورکرس کو لگائے جائیں گے۔ وردھن نے یہ بھی کہا کہ 50 سال سے اُوپر کی عمر والے 27 کروڑ افراد کو ٹیکے لگانے کی تیاری ہو رہی ہے۔ سرکاری ذرایع نے یہ بھی بتایا کہ پچاس سال سے اُوپر کی عمر والوں اور ان سے کم عمر والوں جنہیں دوسری بیماریاں لاحق ہیں کے حوالے سے کم قیمت پر اور آیوشمان بھارت انشورنس کی سہولت کے ساتھ ٹیکے مہیّا کرنے کا جائزہ لیا جارہا ہے۔ اس سلسلے میں حکومت نے پہلے ہی 75 لاکھ افراد کا انتخاب کرلیا ہے جنہیں پہلے ٹیکے لگائے جائیں گے۔ ٹیکے لگانے کے لئے 114100 افراد کو ٹریننگ دی گئی ہے جبکہ وافر مقدار میں سرنج اور دیگر لوازمات کو یقینی بنایا گیا ہے۔ ریگولیٹری منظوری کے دس دنوں کے اندر حکومت ویکسین لگانے کا منصوبہ بنا رہی ہے۔ اس سلسلے میں سبجیکٹ ایکسپرٹ کمیٹی نے پونہ کے سیرم انسٹی ٹیوٹ کے کووڈ شیلڈ اور بائیو ٹیک کے Covaxin ویکسین کو منظوری دی ہے۔ ان دونوں ویکسین کو ڈرگس کنٹرولر جنرل آف انڈیا کی حتمی منظوری کا انتظار ہے۔ منظوری ملنے کے دو مہینے کے دوران ہیلتھ کیئر اور فرنٹ لائن ورکرز کو ٹیکے لگائے جائیں گے۔ ماہ جولائی تک 30 کروڑ لوگوں کو ٹیکے لگائے جاسکیں گے۔ Covaxin اور Covashield ویکسین کی دو دو خوراکیں دی جائیں گی اور 2 تا 8 ڈگری سیلسیس درجہ¿ حرارت میں انہیں رکھا جاسکتا ہے۔
ویکسین لگانے کی مہم کے پہلے وزارتِ صحت نے سنیچر کے دن ملک کے 125 اضلاع میں 286 مقامات پر آزمائشی مہم شروع کی تاکہ ویکسین لگانے میں کسی دقّت کا سامنا نہ کرنا پڑے۔ مشرقی دہلی کے گرو تیغ بہادر اسپتال میں ڈرائی رن پر نظرثانی کے بعد ہرش وردھن نے کہا کہ ”ویکسین کی سیفٹی اور اثر انگیزی ہماری ترجیح ہے۔ پولیو ایمونازیشن کے دوران بہتیری قسم کی افواہیں پھیلائی گئی تھیں لیکن لوگوں نے پولیو کے ٹیکے لگوائے اور اب ملک پولیو کے مرض سے آزاد ہوگیا ہے۔“
اس وقت ہندستان کو دو کووڈ ویکسین دستیاب ہے۔ اوّل آکسفورڈ- آسٹرازینکا کووڈ شیلڈ اور دوسرا بھارت بائیو ٹیک کا تیار کردہ دیسی Covaxin۔ دونوں ویکسین کو رسمی منظوری مل گئی ہے۔ ویکسین کےroll out میں ملک کی 20 وزارتوں اور 23 محکموں کا اہم رول ہے۔ وزارتِ صحت کی خدمات اس سے ماسوا ہیں تاکہ بلا دقّت ملک کے سارے لوگوں کو ٹیکے لگائے جاسکیں۔
بھارت بائیو ٹیک کے تیّار کردہ Covaxin کی منظوری ہندستان کی ویکسین تاریخ میں ایک یادگار دن ہے۔ اب تک ہندستان نے جو ویکسین تیار کی ہے وہ ملٹی نیشنل کمپنیوں کی معاونت سے دوسرے ملکوں میں انجام دی گئی ہیں۔ Covaxin پہلی ویکسین ہے جو اندرونِ ملک تیارکی گئی ہے۔ ہیضہ کا پہلا ویکسین بھی ہندستان ہی میں تیار کیا گیا تھا۔ بھارت بائیوٹیک کے بانی چیئرمین اور منیجنگ ڈائرکٹر کرشنا ایلا نے ہندستانی سائنس کے لئے اسے ایک دیرینہ خواب کی تعبیر بتایا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔